Khokhle log

کھوکھلے لوگ


. سوچ اور فکر اور طالب اور مطلوب کی سمٹے ہمیشہ مختلف ہوتی ہیں . تقسیم اور چناؤ ہمیشہ سے مختلف ہوتا ہے مجھے یاد ہے آج بھی جب میں اور بابا گوجوانوالہ گے تو میرے والد نے مجھے کہا کتنا تکلیف دہ ہوتا ہے نہ جب اپ کسسی شہر میں جائے اور اسکا کرایا ٢.٥ انے ہو اور پھر وہیں کا کرایا ٤٢٠ روپے ہوجاے کتا کچھ بدل گیا تم لوگ نے سمجھوگے کتنی تکلیف دیتی ہے یہ چیز
میں سوچنا شرو ہوگیا ک کیا ہم سے پہلی نسلوں نے سب دیکھا . کیا ایوب سے لے ک بھتو تک اور سوا دو انوں سے چار سو بیس روپیوں تک کا سفر دیکھا مگر اچانک میرے ذہن نے اس بات کو رد کر دیا . شائد ہم نے بھی بہت کچھ دیکھا. بہت چوٹی سی عمر مے بہت کچھ سیکھا ہم نے آج کا نوجوان ٢٠٠٥ کے زلزلوں کے وقت بھی اٹھا، چیف جسٹس ک حق ک لئے آج کا ہی ٹوم دیک اور ہری اٹھا اور جب وانا کو جلتے دیکھا سوات کو چیختے اور پنجاب کو بھوک سے مرتے دیکھا تو لکھنے والو نے لکھا ک ہم نے فس بوک پے سٹیٹس رکھے مگر ہم مے سے کسسی نے نہیں کہا ک ہم تباہ ہوگے کسسی نوجوان نے ملک ک ڈوبنے کی وجہ سے خودکشی نہیں کی اور جب مہینے الله ک عذاب کی شکل مے خیبر پختونخوا کو بپھرتے دریاوں کا لقمہ بنتے دیکھا تب ب ہم میں سے ہی لوگ اٹھے اور مدد کو نکلے …………….یہ متی اتنی بنجر نہیں ہے جتنی نظر اتی ہے ….. لوگو کو ایمنیم کے گانوں پے سر دنتے ہم نظر تو اتے ہیں مگر جب ہم ہاتھ پھیلا ک اپنے لوگو کی مدد کو نکلتے ہیں تو نجانے ق لوگو کی آنکھ بند ہوجاتی ہیں………….. میرا خیال ہے ک یہ مٹی کم سے کم سوچتی ضرور ہے …… چاہے کرککٹ کا کھیل ہو یا قدرتی آفت سے جنگ ہم یقین کا دامن اپنے ہاتھ سے نہیں جانے دیتے

مگر میرے ملک ک وو لوگ جو ہر شام ہم سب ک گھروں پے ٹی وی کی سکرین پے جلوہ گر ہو ک اپنی ٹی ر پی کی خاطر حقیقت سے آنکھیں چھپا ک کبھی جیلی ڈگریوں پے قوم کو بربادی کی وعید سناتے ہیں تو کبھی ہمارے رہنماؤں کو بات بے بات تنقید کا نشانہ بناتے ہیں. میرے الفاظ کا مقصد ہر گز یہ نہیں ک وو حکمران اچھے ہیں مگر وو جیسے بھی ہیں ہمارے ہیں ق ک میرے الله پاک نے فرمایا ہے کے جیسی قوم ویسے حکمران. مگر میرا خیال ہے کے اگر واقعے کسسی کو اس قوم کا خیال ہے تو اٹھے اور اپنی ٹی وی سکرین پے ا ک لوگو سے کہیں ک دل کھول ک لوگو کی مدد کرے اور ساتھ اپنی تنخواہیں بھی ان لوگو کو دیں اور وو تمام تر سیاست دن جو دوسرو پے کیچر اچھالتے ہیں خدا ر اس وقت اپنی اندروں اور بیرون ملک اثاثے اپنے لوگو کو تقسیم کرے کیوں کے یہ انہی لوگو کا مال ہے اور اگر ایسا نہ کیا گیا تو شائد فرانس کے انقلاب کی اک شکل ان حکمرانو اور ٹی وی انکرز کو بھی دیکھنی پڑے کیوں کے یہ وو وقت نہیں کے دوسروں پے کچر اچھالا جائے اور اپنی شہادتو اور دوسروں کی گداریوں کا رونا رویا جائے ……. کیوں کے میرے نزدیک اس وقت ذاتی انا سے برا مثلا قوم کی بقا ہے ……….ہم بہت کھوکھلے نہیں ہیں مگر ہم جن ک اگے مو پے مقفل باندھتے ہیں وہ ضرور کھوکھلے ہیں کیوں کے خدا ایسی قوم کی حالت نے بدلتی جسے خود خیال نہ ہو اور وو صرف بٹے کرے اور اک دوسرے پے انگلیاں اٹھے ……………………….. اور اکھڑ پے ان کھوکھلے لوگو کے لئے جو ایے دن کسسی نہ کسسی سے مسلے کی وجہ پوچھتے ہیں انھ بتاتا چلو ک ارشاد باری تالا ہے ک خدا اس بستی کی مصال دیتا ہے جس مے امن بھی تھا اور سکون بھی اور رضک بھی فراوانی سے ملتا تھا انہو نے ناشکری کی اور میں نے انھ بھوک ار خوف کا لباس پہنا دیا ……………….. پنجاب دنیا کا گلہ گھر تھا اور آج پورے ملک مے بھوک ناچتی ہے اور خوف ایسا ک اب بارشو اور درگاہوں سے بھی دار لگتا ہے اور اک طرف ذاتی انا اور کچھ کھوکھلے لوگ…………..

———————————————————————————————————————————————————————————————————–
Every reader has a right to disagree. this is entirely my way to look at the things. I am sorry if my words offended any of the reader
Dedicated to the one who made me ryt this and all those who always appreciate my writings

Regards

Haider Miraj
12:05 am
August 4th, 2010

Advertisements

Published by

Muhammad Haider Miraj

A person on the journey of self exploration & learning/development. Time and pain have been my teachers and mentor they made me believe that whatsoever happens, happens for the reason - its gives you learning and add value to yourself. Nature and Spirit helped me connecting within and connect the dots to enhance and and enrich the Faith. Aksr lafz insan ko khokhla bna dete hain jab insan kahe kuch aur .........kere kuch aur..... shaied main b khokhla hogya aur khud ki shanakht se bhagne wale kisi ko shanakht ne de skte. Shaied jo ap parhe wo ap ki zat ka ansar bhi hun q k hain to hum sab ik k hi jaye bus ab khaul mukhtalif pehn liye hain aur ye tehreerein khol walo k liye ne humare asal k liye hain. Duaon ka talib Haider Miraj

5 thoughts on “Khokhle log”

  1. dekh mere bhai yahan 2 chezeen ati hain …. ye tou humari sari dunya nay dekha hai kay humare pakistani nojawanoon men bohat jazba hai …. lakin teri b baat thek hai kay why our media is so biased … hmm ab dekh jab humari nojawanon ko free hand milta hai wo kuch na kuch ker dekhate hain .. lakin media hmmm its been backed by i dun knw who but some1 very strong … so hum nojawan wahan survive nai ker saktay they want free hand … humara media hi un logon ko pakerta hai jinke lie paisa zarorat ho taaake wo unse paise kay zoor pe kuch b kerwa sakeen :s ….

  2. Miski I agreed
    per hum me se hi koi uth k shutup call dega kab talak hum ghut k rhege ……….. hum hi jinho ne bhutto ko iqtedar dia ar hum hi hain jinho ne jamshed dasti ko elect kia farq sirf chaal ka he …………. no 1 is backing dem per masla ye he k ab trp ki khatir wajood bick rhe hain ……..

  3. han sai keh raha hai lakin wo zamana b tou dekh …. yara this is all part of a plan they have put out youth in so much pressure kay wo usse bahir a hi na sakeen … n to give a shut up call v need a big step seriously a big step jis men humko in sab pressure say nikal ker sirf aik hi maksad pe kaam kerna pare ga ,,, n is tarha ki youth bnanay kay lie we have to train them from the very beginning coz hum tou in cheezom men phans gae hain jinka koi end nai hai :s it was all planed …

  4. we agree per miski masla ye he k hum logo ki prioritiez aur hain 1 thing i cn assure u hume ihsas hota he k Pakistan is our top most priority per tb tk bht dair ho chuki hoti he …….. aj ka banda mostly bndi, fone carrier in sab se bahir ne ata aur jab niklta he 2 wo status conflict me phas chuka hota he and after dat all dis mobe ……………………. hum haqeeqtan khokhle ho chuke hain ………….. but it seems k survival ab bht muhkil he kabhi kpk se pani nikal k hamare ghar ka rukh kerega aur kabhi kisi khudkash hamla awar ya target killer ko meri gali aur mohala lazmi nazar ayega

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s